شیرو ڈنگر کی بلی

آج سے سو سال پہلے  جرمنی میں ایک شیرو ڈنگر نامی بادشاہ گذرا ہے۔ یہ بادشاہ سلامت ہر وقت کوئی ناکوئی شرارت سوچتے رہتے تھے کہ کس طرح رعایا کو تنگ کیا جائے۔


ایک دفعہ کا ذکر ہے کہ شیرو ڈنگر بادشاہ نے ایک ڈبہ بنایا اور شہر کے ذہین ترین شخص کو بلا کر کہا کہ  اس ڈبے میں تابکاری آئٹم اور تابکاری آئٹم سے آئٹم کا اخراج جانچنے والا آلہ زہریلی گیس اور بلی ہے۔آئٹم حرکت میں آئے گا تو زہریلی گیس کا اخراج ہوگا ظاہر سی بات ہے بلی مر جائے گی۔
بس ذہین ترین آدمی اس بلی کو زندہ اس ڈبہ سے باہر نکالو!!۔


بندہ تو ذہین تھا ہی لیکن اس کیمیائی شیطانی کا حل اس کے پاس بھی نہیں تھا۔ جان خطرے میں ڈال کر اس بندے نے شیرو ڈنگر باشاہ سے کہا کہ


بادشاہ سلامت بلی کو ڈبے سے نکالنے کا عمل شروع کرنے سے پہلے مجھے ضمانت دیں کہ یہ بلی واقعی زندہ ہے؟


شیرو ڈنگر بادشاہ ذہین ترین بندے کی بات سن کر اس کی ذہانت کا قائل ہو گیا۔(شرارتی تھا  ضروریہ باد شاہ ، لیکن کئی نسلوں بعد اس نے خبیث ہونا تھا) یہ سو سال پہلے کی بات ہے۔اس دن سے جرمن عوام میں ایک عوامی قول مشہور ہو گیا


شیرو ڈنگر کی بلی!!!


جو خود نا کر سکو وہ کام دوسروں  سےزبردستی مت لو کے معانی میں استعمال کیا جاتا ہے۔


اس کہانی کو اگر آگے چلایا جائے تو کچھ یوں ہوا کہ شیروڈنگر کو بعد میں بلی کے حقوق کی خلاف ورزی کے جرم میں گرین پیس والوں کے حوالے کردیا گیا تھا۔۔کاش کے گرین پیس والے سازش نا کرتے۔!!


جرمن کے پاس ایک ہی شیرو ڈنگر بادشاہ تھا جسے انہوں نے ذہین ترین بندے کے ذریعہ سمجھایا اور بعد میں گرین پیس والوں کے حوالے کرکے جان چھڑا لی!!۔


گرین پیس والے بیچارے رحم دل تھے انہوں نے مجھے شک ہے کہ اسے پاکستان بننے سے پہلے اسی علاقے میں لا کر چھوڑ دیا تھا۔


ہمارا کوئی بھی مسئلہ ہو۔۔۔۔۔۔۔ہوتا کچھ بھی نہیں لیکن یہ شیرو ڈنگر کی اولادیں ایسی شرارت کرتی ہیں کہ سارے اچھل اچھل کر بے حال ہوتے ہیں تو نئی شرارت تیار ہوتی ہے۔۔دو گروہ تو ایسے ہیں کہ ان میں نہایت اعلی  شیطانی ذہانت کے شیرو ڈنگر پائے جاتے ہیں۔


ایک مذہبی فرقہ پرستی اور دوسری سیاست۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔عوام ھائے ھائے کرتے بے حال ہوتے ہیں تو نیا کھڑاک تیا ر ہو جاتا ہے۔اور بادشاہت بھی انہی دو ہی گروہوں کے پاس ہے۔۔


ہلا جلا کے دیکھو شیرو ڈنگروں کی بلیًاں زندہ بھی ہیں یا موت کی نیند سو رہی ہیں؟
ہلانے جلانے والا بھی  شیرو ڈنگر ۔۔۔۔۔۔۔۔۔لاتیں مار کر  دیکھتا ہے۔۔


اصلی شیرو ڈنگر کے متعلق انگریجی میں یہاں  کلک کریں ٍ↓ ۔۔ہم نے ایسا ہی سمجھنا تھا ، جو سمجھ  کر سمجھا نا سکے۔


http://en.wikipedia.org/wiki/Schr%C3%B6dinger%27s_cat

شیرو ڈنگر کی بلی شیرو ڈنگر کی بلی Reviewed by یاسر خوامخواہ جاپانی on 7:23 PM Rating: 5

10 تبصرے:

شعیب صفدر کہا...

شیر و ڈنگر بلی؟؟؟ یعنی مختلف نسل جانور!!!
شیر
ڈنگر (جانور)
اور بلی کمال ہے!!!

Bilal Imtiaz Ahmed کہا...

Erwin Rudolf Josef Alexander Schrödinger was not a German king, he was an Austrian born Physicist.

Bilal Imtiaz Ahmed کہا...

I am little busy but soon I will tell you why schrodinger cat is soo famous.

عدنان مسعود کہا...

گو کہ کوانٹمی شروڈنگرسے اس کا ڈاکخانہ نہیں ملتا، لیکن آپ نے متوازی کائناتوں سے شیرو ڈنگروں کا جو مضمون اخذ کیا ہے وہ اپنی حیثیت میں خود زمان و مکاں کی ایک متوازی حقیقت ہے۔

ہلا جلا کے دیکھو شیرو ڈنگروں کی بلیًاں زندہ بھی ہیں یا موت کی نیند سو رہی ہیں؟

بہت خوب!

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

وکیل صاحب ۔۔۔۔۔عوام کو بھی ڈنگر کہہ دیا تو ۔۔۔بچائے گا کون؟
کوئی ایک جانور تو قابل رحم ہو نا چاھئے

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

وکی صاحب نے لکھا وہ سب غلط ہے ۔
اصلی شیرو ڈنگر کے متعلق میں نے آپ کو بتا دیا ہے۔
؛ڈڈ

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

ضرور جناب ضرور لکھئے۔
ہم نے تو بیچارے شیرو ڈنگر کی بیستی خراب کردی۔
بلکہ میری خواہش ہے اس طرح کی معلومات ہمارے بڑے اردو میں ضرور لکھیں۔

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

مضمون پسند کرنے کا شکریہ عدنان صاحب۔

افتخار راجہ کہا...

اس طرح کی تحریریں نہ لکھا کرو جی، ایویں ہی لوگوں کو ڈراؤ مت،
وہ ذمانہ گیا ابھی ہمارے ادھر اس نام کا کوئی بندہ نہیں،
صرف ذرداری ہے ایک زرداری سب پر بھاری
ہیں جی

تصميم المواقع کہا...

آپ کی ویب سائٹ بہت اچھی ہیں اور آپ اچھی چیزیں بھی لکھتے ہیں۔ ایسے ہی لکھتے رہیں اور خوش رہیں۔

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.