میلہ تے میلہ اے

میلہ تو میلہ ہوتا ہے ہر کسی کا دل کرتا ہے۔ذرا شغل میلہ کر لیں اسی لئے تو میلے کو میلہ کہتے ہیں۔تو جناب ایک دن فیس بک پر معلوم پڑا میلہ ہو رہا ہے۔لیکن منانے والے اکیلے اکیلے ہی میلہ لوٹنے کے چکر میں ہیں۔۔جو میلہ لوٹنا چاھتے ہیں وہ سارے کے سارے انگریجی والے ہیں۔بلال اور عبدالقدوس صاحبان بیچاروں نے تو ہم سے ووٹ ہی مانگا تھا۔


 


لیکن ایسا کیسے ہو سکتا ہے ،میلہ ہو اور ہم نا جائیں میلہ میلہ کردے۔میلے میں شمولیت کی عرضی دی اور اپنا بلاگ اردو بلاگر کی کیٹیگری میں شامل کر دیا۔۔فوراً انتظامیہ کی طرف سے میل آئی کہ انگریجی میں تفصیل لکھو کہ یہ بلاگ ہے کیا؟


میل دیکھ کر چاچا غالب اور عیش صاحب کا لینا دینا یاد آگیا۔ یہ لینا دینا طنز تھا یا لوگاں کو کچھ سبق دینا تھا۔ہمیں کچھ معلوم نہیں۔


گراپنا کہا تم آپ ہی سمجھے تو کیا سمجھے


مزہ کہنے کا جب ہے اک کہے دوسرا سمجھے


ہم نے جوابی میل میں لکھا جناب گلابی انگریز صاحبان میرا بلاگ اردو میں ہے،اور پڑھنے والے بھی پینڈو(یہ عزت والا لفظ ہے جی)تفصیل انگریجی میں کس خوشی میں لکھوں؟  گلابی انگریز انتظامیہ بیچارے شریف حضرات کے ہاتھوں میں ہے انہوں نے خود ہی میری گلابی اردو کا ترجمہ کیا اور ہمارا بلاگ بیسٹ اردو بلاگر کی کیٹیگری میں نامزد کردیا۔ اے ہوئی نا گل دھونس آلی۔۔۔۔ ہیں جی


ہمارا گلابی انگریز کہنے کا مقصد تو یہ تھا کہ پاکستانیوں کے بلاگ کو ایوارڈ بھی دینا ہے اور میلے میں شمولیت کیلئے انگریجی بھی لازمی؟ بس ہمارے تپنے کیلئے اتنا ہی کافی تھا ۔۔ہیں جی


اس کے بعد ہم نے ایوارڈ وصولنے کیلئے کمپین شروع کی تو ایک ہمارے پیارے دوست ہیں نہایت سڑیل قسم کے۔۔انہوں یہ لکھ مارا!۔ سڑ تو ہم گئے کہ کیا زبردست ذہن پایا !!!  بے ساختہ ہنس دیئے۔۔۔خیر بندے کو ڈھیٹ ہونا چاھئے یہ بھی ہماری پبلسٹی ہی ہے۔ہماری تصویر بھی آپ یہاں پر دیکھ سکتے ہیں۔۔۔ہیں جی


ہم نے تو یہ ایوارڈ لینا ہی لینا ہے بے شک ہمارا مقابلہ بڑی عید پہ کنکریاں کھانے والے اور رمضان میں قید ہو جانے والے صاحب اور پیارے استاد جی سے ہی کیوں نا ہو۔۔۔قابلیت یا صلاحیت کے بل پر ہم پاکستانیوں کو اب تک کونسا حکمران ملا ہے جو ہم خاموش بیٹھ جائیں۔۔۔ہیں جی


تحریک انصاف والوں سے آجکل ہمارے تعلقات نہایت قریبی ہوتے جارہے ہیں۔(یہ ان کا خیال ہے)  صدر مملکت زرداری صاحب اور الطاف بھائی ہمارے شاہ جی ہونے کی وجہ سے  ہم سےفیض یاب ہوتے ہیں اور آپ کے مال اور کھال سے۔۔۔ہیں جی ۔۔


کہنے کا مقصد یہ ہوا کہ ہماری  کنڈ(پشت) وی کافی مضبوط ہے۔ تو جناب یہاں پہ آپ لوگاں سے بھی پر جوش اپیل کی جاتی ہے کہ اس ملک کو بچا نا ہے تو شاہ جی کو ووٹ دینا ہے(ویسے عام دنوں میں مجھے کوئی شاہ جی کہے تو برا لگتا ہے)تو جناب یہاں تشریف لیکر جائیں ھیڈنگ کے نیچے پانچ ستارے بنے ہیں اور انہیں کلک کریں۔۔۔ہیں جی


ویسے ایسے میلے شیلے ہونے چاہیں کہ نیٹ پر گرما گرمی رہے تو کچھ اچھا ہی تخلیق ہوگا۔سڑیل قسم کے بلاگروں کے طنز کا جواب چاچا غالب نے بہت پہلے دے دیا ہے۔


نہ ستائش کی تمنانہ صلہ کی پروا


گر نہیں ہیں میرے اشعار میں معنی نہ سہی

میلہ تے میلہ اے میلہ تے میلہ اے Reviewed by یاسر خوامخواہ جاپانی on 4:39 PM Rating: 5

11 تبصرے:

سعد کہا...

سڑیل :| :D

علی کہا...

بہت خوب۔ بھائی جان بہت خوب۔ایک استاد صاحب نے ایک بار بڑا قیمتی مشورہ دیا کہ بیٹا بے عزتی صرف تب ہوتی ہے جب اسے محسوس کرو۔
اور ہاں آپکو پانچ ستارے والا ووٹ میں پہلے ہی دے چکا ہوں مطلب تو آپ سمجھ ہی گئے ہوں گے کہ شرافت کا مظاہرہ کرتے ہوئے واپسی مجھے بھی پانچ ستارے والا ووٹ دیں۔

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

آخر سڑ ہی گئے نا۔۔۔؛ڈڈ

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

علی بھائی شرافت اور ایسے موقعےپہ؟
دیکھ لیں زرداری ساب ہم سے فیض یاب ہوتے ہیں۔

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

علی بھائی لنک پیسٹیں۔۔۔تلاشنے کے باوجود آپ کا بلاگ نہیں ملا۔ویسے میں آپ کا خاموش قاری ہوں

عمران اقبال کہا...

سائیں... آپ کے کہنے سے پہلے ہی ہی سبز ستارے اوہ سوری پانچ ستارے آپ کے حق میں ڈال دیے... اللہ آپ کو کامیاب کرے...

علی کہا...

http://pakistanblogawards.com/2011/11/12/humor-blog-ali-hasaan/

اصل میں میں نے بیسٹ اردو والی کیٹیگری میں ٹانگ نہیں اڑائی ناں۔۔ہم انگریزوں سے متھا دینے کی ناکام کوشش میں لگے ہیں کہ بیسٹ ہیومر

DuFFeR - ڈفر کہا...

یہ میلہ ہمارے مطلب کا ہے ہی نہیں
خاور کی بات کے مطابق ہمیں کوئی اور قابل اعتبار مکینزم بنانا چاہیے
کیا میں نے “قابل اعتبار” لکھا؟

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

کامیابی کے بعد کیا ہوگا؟
آپ کو بھی اللہ میاں کامیاب کریں

یاسر خوامخواہ جاپانی کہا...

ہاں جی
کچھ کرنا پڑے گا۔
انعام شنام رکھ لیں گے

عبدالقدوس کہا...

آوے گا وائی آوے گا
اویں خوامخواہ آوے گا

تقویت یافتہ بذریعہ Blogger.